مجھے مکمل انصاف چاہیے

بچپن سے ہوش سنبھالنے اور پھر ہوش سے لیکر مدہوش (بڑھاپے کی جانب جانے) ہونے تک، ملک میں ایک نامعلوم مخلوق کی بالادستی دیکھی ہے ۔۔۔ چند خاندانوں کی حکومت، اور کچھ نادیدہ ہاتھوں نے ہمیشہ ہم عوام کو یرغمال بنائے رکھا ہے ۔۔ یہاں کرپٹ ہمیشہ شریف رہا اور محافظوں نے ہمیشہ رہزن کا کردار ادا کیا ہے ۔۔ یہاں جو بھی آیا پھر اس کا جانے کو دل نہ کیا ۔۔۔ نہ صرف خود،بلکہ اہل خانہ کو بھی کاروبارسیاست میں گھسانے پہ بضد رہا ۔۔۔ وطن عزیز میں سیاستدانوں کو یہ استثنیٰ بھی ہمیشہ حاصل رہاکہ بڑی سے بڑی چوری ،گناہ اور نااہلی کے باوجود بھی انہیں کوئی عملی سزا نہ ملی جس باعث یہاں نظام کبھی درست سمت جانے کے امکانات بھی ختم ہوگئے۔۔۔(بھٹو کی پھانسی ایک الگ موضوع ہے،اس کے علاوہ چند ایک لوگوں کو جیل کی سیر کو بھی حقیقی سزا کے ذمرے میں شامل نہیں کیاجاسکتا کہ اربوں کھربوں کی لوٹ مار اور لاکھوں کی زندگیاں تباہ کرنے کے بعد ویسی جیل کی تو شائد الٹا انعام سمجھیں )۔
ویسے تو آمیریت نے ملک کو زیادہ ترنقصانات ہی پہنچائے ،مگر مشرف دور کے بعض اقدامات یقینا قابل ستائش ہیں جن میں میڈیا کی آزادی (حالانکہ میں اسے ایک منفی اضافہ سمجھتا ہوں) اور تیزرفتارانٹرنیٹ سروسز کےلیے اقدامات اٹھانا شامل ہیں ۔۔ میڈیا (سوشل میڈیا سمیت) کی آزادی کے نقصانات ایک الگ مضمون کےمتقاضی ہیں،لیکن یہاں اس کا ایک بہت بڑافائدہ گنوانا چاہتا ہوں جو ہر ایک کو بولنے کاحق مل جانا ہے ۔۔۔ آزادمیڈیا جس طرح عوامی نمائندوں کی غلطیاں کوتاہیاں سامنے لاتا ہے ،(یا اس کے ذریعے لائی جاتی ہیں) وہ یقینا اس سے پہلے ممکن نہ تھا،،اور اس کے نتیجے میں پیدا ہونے والی سوچ کی لہر بڑے بڑے برجوں کوالٹانے لگی ہے ۔۔۔ (اس میڈیا کو کس طرح استعمال کیاجاتا ہے ،یا کون اس کےپیچھے اپنے مقاصد پورے کرتا ہے یہ الگ بحث ہے ) ۔۔۔
شریف فیملی کے خلاف چلنے والا پانامہ کیس بلاشبہ ہماری تاریخ کا اپنی نوعیت کا واحد کیس ہے کہ اس سے قبل کسی حکمران یا اس کے اہلخانہ کے خلاف اسی کی حکومت میں اس طرح مقدمات چلنے اور اس میں موثر سزائیں ہونے کا رواج موجود نہ تھا۔۔ پانامہ کیس میں بااثر منتخب وزیراعظم کی نااہلی بھی کم نہ تھی کہ سونےپہ سہاگہ کے مترادف اس مقدمات کوانصاف کی حقیقی مثال بنانے کےعملی اقدامات بھی نظر آنا شروع ہوگئے ہیں ۔۔۔ منتخب وزیراعظم اور اس کے مجرم اہلخانہ کے خلاف فردجرم عائد ہونا یقینا ہمارے جیسے ملک میں کسی معجزے سے کم نہیں ہے ۔۔۔ بطور پاکستان یقینا باشعور اور نیوٹرل طبقہ اس پہ بےحدخوش ہے
مگر میں خوش نہیں ہوں ۔۔۔۔
۔مجھے نوازشریف،زرداری،عمران خان یا کسی ڈیزل پہ چلنے والے سے کوئی بھی سروکار نہیں،مجھے میرا ملک عزیز ہے ۔۔۔ اور یہ کیس مجھے بتارہاہے کہ یہاں اس کا مقصد ایک کرپٹ کوسزادینا نہیں بلکہ نادیدہ ہستیاں کسی گستاخی پہ سیخ پا ہوکر اپنے ایک بچے جمورے کو سبق سکھانے پہ تل گئی ہیں جس کےلیے یہ سارا تماشا کیاجارہاہے ۔۔۔ یہ کیس بھی حقیقی ہے اور مجرمان پہ لگے الزامات بھی صحیح ہیں،،،مگر غلط یہ ہے کہ اپ صرف ایک خاندان کو سبق سکھانے کےلیے اپنی ساری قوت کو بروئے کارلائے ہوئے ہیں ۔۔۔ یہاں سزا دینا مقصود ہے تاکہ آئندہ کوئی دوبارہ اپ کی گستاخی کی جرات نہ کرسکے ۔۔۔ یہاں صرف اپنے مفادات کا تحفظ مقصود ہے ۔۔کیوں کہ اگر واقعی پاکستان کا درد ہوتا یہ نظام کی تبدیلی مقصود تھی تو انصاف کا یہ عمل بلاتفریق سبھی کےلیے شروع ہوتا،چاہے اس کی زد میں “اپنے بچے” ہی کیوں نہ آجاتے۔۔۔
انصاف کا تقاضہ تو یہی ہے کہ اس ملک کو نقصان پہنچانے والے سبھی شرفا کو کٹہرے میں لایا جائے،،جن کرپٹ لوگوں کو نیب نے پلی بارگین (یعنی آٹے میں سے نمک جتنے پیسے واپس لیکر ایک کرپٹ کو کلین چٹ دیکر دوبارہ لوٹنے کالائسنس دینا) کی واشنگ مشین میں دھوکرصاف کیا ہے ،سب سے پہلے انہیں بنا کسی مقدمے کے تاحیات قید کی سزا سنائی جائی،اس کے بعد ان لوگوں کو عوامی پیسوں اور وسائل سے پروٹوکول دینا فوری بند کیاجائے جو اسی نوعیت کے سنگین مقدمات میں نامزد اور عدالتوں میں پیش ہورہے ہیں،،ان کی سماعت ہنگامی بنیادوں پہ کرتے ہوئے کیس کا فیصلہ جلداز جلد کیاجائے،تب تک انہیں بھی وہی بینچ اور وہی سہولتیں دی جائیں جو ایک پاکستانی شہری کو دستیاب ہیں ۔۔ اگر یہ سب نہیں کرنا تو پھر ایک خاندان کو سزا دیکر اپ سوائے ذاتی انا کوتسکین دینے کےاور کچھ نہیں اکھاڑ پائیں گے ،،یہ نظام پہلے سے بھی بدترہوجائیگا کہ کرپٹ افراد جان لینگے کہ اربوں کی کرپشن کے بعد (کسی گستاخی کی صورت میں ) ان کو ملنے والی سزا بھی یقینا کسی موج سے کم نہیں ،،،سو وہ پہلے سے زیادہ آسودگی سے کرپشن کرنے کو اپنا حق سمجھ لیںگے ۔۔۔ اور یہ میرے لیے بہت غلط ہوگا ۔۔۔۔اور میں یہ غلطی نہیں ہونے دونگا ۔۔۔ مجھے مکمل انصاف چاہیے ۔۔۔ایسا انصاف جو ایک ادارے یا ایک گھر کا نہیں بلکہ ایک قوم کاانصاف ہو۔۔۔۔۔۔۔مجھے مکمل انصاف چاہیے

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

w

Connecting to %s